رپورٹ برائے مصاحبہ : میم بشرٰی اقبال ملک اور اسلام آباد چیپٹر📝

18 نومبر 2018بروز اتوار ینگ ویمن رائٹرز فورم اسلام آباد چیپٹر کی جانب سے فورم کی بانی اور روحِ رواں محترمہ بشرٰی اقبال ملک کے اعزاز میں ظہرانہ کا اہتمام کیا گیا.یہ تقریب صدر اسلام آباد چیپٹر محترمہ فرحین خالد کے گھر منعقد ہوئی جس میں کابینہ سمیت کئی ممبران نے شرکت کی.شرکت کرنے والوں میں صفیہ شاہد,عروج احمد,طاہرہ غفور,معافیہ شیخ,شبیہہ زہرا,رضوانہ,شفاء سجاد ,اور فاطمہ عثمان شامل ہیں.

کھانا بہت خوشگوار ماحول میں کھایا گیا.بعد از طعام گفتگو کا سلسلہ شروع ہوا اسی دوران میم بشرٰی اقبال ملک نے ممبران کے ساتھ فورم کے ادبی سفر سے متعلق بھی گفتگو کی اور نئے ممبرز بنانے,ممبر شپ کو مضبوط بنانے,مختلف تعلیمی اداروں میں نوجوان نسل کے لیے سیمینار منعقد کرانے سمیت کئی نئے پراجیکٹ کے سلسلے میں رہنمائی بھی کی.
اسلام آباد چیپٹرکی کامیابیوں کو سراہتے ہوئے انہوں نے کہا کہ


“مجھے رابعہ بصری اور فرحین خالد کے خلوص و محنت کو دیکھ کر بہت خوشی ہوتی ہے ان دونوں کی قیادت میں اسلام آباد چیپٹر تیزی سے کامیابیاں سمیٹ رہا ہے.آپ کو کامیاب ہوتے دیکھ کر مجھے ایسا لگتا ہے کہ میرا لگایا ہوا پودا اب پھل دینے لگا ہے”
میم بشری اقبال کی گفتگو فیس بک لائیو کے ذریعے دیگر لوگوں تک بھی پہنچائی گئی.
ینگ ویمن رائٹرز فورم اسلام آباد چیپٹر کی شریک بانی محترمہ رابعہ بصری نے کہا کہ “فورم کی کامیابیاں ٹیم ورک کا نتیجہ ہے اور فورم آئندہ بھی ادبی خدمت کے لیے اسی طرح سر گرم عمل رہے گا”
اسلام آباد چیپٹر کی صدر محترمہ فرحین خالد نے مختلف سرگرمیوں ,تربیتی سیشنز اور ورکشاپس کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ”نئے لکھنے والوں کے لیے مزید مواقع بھی لے کر آئیں گے.ہمارا ادبی قافلہ پر عزم ہے کہ اس قافلے کو مزید وسعت کے ساتھ ساتھ مزید کامیابی بھی ملے”
یہ نشست شام 5 بجے تک جاری رہی.معزز مہمان خصوصی کو صدر اسلام آباد چیپٹر محترمہ فرحین خالد کی جانب سے تحائف بھی پیش کیے گئے.اسلام آباد چیپٹر کی ہونہار ممبر طاہرہ غفور نے اپنی تدوین کردہ کتاب”منطق الطیر” میم بشری اقبال ملک کو پیش کی جس پر میم بشرٰی اقبال ملک نے ان کو بہت سراہا .بعد ازاں مہمانوں کو چائے پیش کی گئی…اور یوں نہ چاہتے ہوئے بھی یاران ادب کی یہ محفل اپنے اختتام کو پہنچی…

رپورٹ:صفیہ شاہد
تدوین:شریک بانی اسلام آباد چیپٹر محترمہ رابعہ بصری